بغیر ہیلمنٹ جرمانہ بے بس شہری دکانداروں کے درمیان فٹبال بن گئے۔

0

ہیلمٹ نہ ہونے کی صورت میں دو ہزار روپے جرمانے کے احکامات پر دکانداروں نے چارسو والا ہیلمیٹ 4000 روپے تک کا کر دیا۔ٹریفک پولیس کی جانب سے موٹر سائیکل چلانے کے لیے ہیلمٹ ضروری قرار دیے جانے اور ہیلمٹ نہ ہونے کے سورت میں دو ہزار روپے جرمانہ ہوگا۔دکانداروں نے 400 والا ہیلمٹ 4 ہزار روپے تک کا کردیا ہے۔شہری لوٹنے پر مجبور جبکہ ضلعی انتظامیہ تماشہ دیکھنے میں مصروف ہے۔

 

ڈی آئی جی پنجاب ٹریفک پولیس اطہر اسماعیل کی طرف سے موٹر سائیکل چلاتے وقت ہیلمٹ کا استعمال لازمی قرار دیئے جانے کے بعد شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔اور ملتان میں ہیلمٹ میں نایاب ہوتا جا رہا ہے ہیلمٹ لازمی قرار دیے جانے اور مارکیٹ میں ہیلمٹ کی قیمتوں میں کئی گنا اضافے پر ملتان ضلعی انتظامیہ بلکل خموش ہے موٹر سائیکل چلانے والوں کی کثیر تعداد ان افراد پر مشتمل ہے جو غربت کی زندگی بسر کرتے ہیں۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.